کراچی میں،بلدیاتی الیکشن کیلئے فوج طلب اور موبائل فون بند کرنے کا منصوبہ

November 24, 2015 4:03 pm0 commentsViews: 24

چیف سیکریٹری کو محکمہ داخلہ، پولیس اور قانون نافذ کرنے والے دیگر اداروں کی مشاورت سے سیکورٹی پلان تیار کرنے کی ہدایت
بلدیاتی انتخابات کے دوران لائسنس یافتہ اسلحہ کی نمائش پر بھی پابندی ہوگی، وزیراعلیٰ سندھ کی زیرصدارت آئندہ ہفتے اجلاس ہوگا
کراچی( نیوز ڈیسک) حکومت سندھ نے 5 دسمبر کو کراچی میں منعقد ہونیوالے بلدیاتی انتخابات کے دوران فوج طلب کرنے‘ موبائل فون سروس بند رکھنے اور لائسنس یافتہ اسلحے کی نمائش پربھی پابندی لگانے کیلئے منصوبہ بندی کرلی ہے‘ رواں ہفتے وزیراعلیٰ سندھ کی سربراہی میں کراچی میں بلدیاتی انتخابات کے دوران امن و امان قائم رکھنے کے حوالے سے اجلاس منعقد ہوگا‘ جس میں اہم فیصلے کئے جائیں گے‘ ذرائع کے مطابق کمشنر کراچی شعیب احمد صدیقی نے کراچی میں بلدیاتی انتخابات کے دوران امن و امان قائم رکھنے کیلئے فوج طلب کرنے اور لائسنس یافتہ اسلحے کی نمائش پر پابندی لگانے کے حوالے سے حکومت سندھ کو سفارش کی ہے‘ ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ نے چیف سیکریٹری سندھ کو ہدایت کی ہے کہ وہ شہر میں بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے محکمہ داخلہ‘ پولیس اور دیگر قانون نافذ کرنے والے اداروں سے مشاورت کرکے سیکورٹی پلان تیار کریں۔ واضح رہے کہ پہلے مرحلے کے بلدیاتی الیکشن میں خیر پور میں ہلاکتوں کا واقعہ پیش آنے کے بعد حکومت سندھ نے دوسرے مرحلے کے الیکشن میں لائسنس یافتہ اسلحے کی نمائش پر پابندی لگائی تھی‘ جبکہ پولنگ اسٹیشنوں کے باہر فوج اور رینجرز مقرر کرکے سیکورٹی کے سخت اقدامات کئے تھے‘ جس کی وجہ سے 14 اضلاع میں بلدیاتی انتخابات کے دوران کوئی ناخوشگوار واقع رونما نہیں ہوا۔ حکومت سندھ اب 5 دسمبر کو کراچی میں منعقد ہونیوالے بلدیاتی انتخابات کیلئے بھی سخت ترین اقدامات کرنے کی تیاری کررہی ہے۔

Tags: