پاکستان میں موبائل فون انڈسٹری پر ٹیکسوں کا بوجھ دیگر ممالک سے زائد

November 25, 2015 4:19 pm0 commentsViews: 20

اسلام آباد( صباح نیوز) موبائل فون کی بین الاقوامی تنظیم جی ایس ایم اے نے سالانہ رپورٹ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان میں موبائل فون انڈسٹری پر ٹیکسوں کی شرح دنیا بھر میں سب سے زیادہ ہے جبکہ چیئر مین پی ٹی اے نے کہا ہے کہ ٹیکسوں کی شرح میں اضافے سے ٹیلی کام سیکٹر کی مجموعی آمدنی میں کمی واقع ہوئی ہے۔ رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ پاکستان میں ای کامرس اور موبائل فون کے ذریعے کاروباری سرگرمیوں کو فروغ دینے کے وسیع مواقع موجود ہیں تاہم ٹیکسوں کی بھاری شرح موبائل سیکٹر کی ترقی میں رکاوٹ ڈال رہی ہے۔ گزشتہ روز جی ایس ایم اے رپورٹ کے اجراء کے موقع پر اسلام آباد میں منعقدہ تقریب سے خطاب میں وزیر مملکت برائے انفارمیشن سیکریٹری انوشہ رحمن نے کہا کہ آئی ٹی کی ترقی کی وجہ سے دنیا بھر میں ٹیلی کام کمپنیاں پاکستان میں دلچسپی لے رہی ہیں۔

پی ٹی سی ایل نے ٹیکسز وصول کرنا شروع کر دئیے
کراچی( نیوز ڈیسک) پی ٹی سی ایل کی طرف سے ود ہولڈلنگ ٹیکس اور ایف ای ڈی و سیلز ٹیکس کی مد میں از خود زائد رقوم وصول کئے جانے کا انکشاف ہوا ہے جبکہ کمپنی نے اپنے لینڈ لائن صارفین کیلئے فریڈم پیکج میں دسمبر سے ماہانہ100 روپے اضافے کا بھی اعلان کر دیا ہے۔ اس سے قبل براڈ بینڈ صارفین کے فکس ٹیرف میں بھی 100 روپے کا اضافہ کر چکی ہے۔ اس اضافے سے پی ٹی سی ایل کی آمدنی بڑھ رہی ہے تاہم صارفین پر ہر ماہ کم از کم 100 اور زیادہ سے زیادہ 500 سو روپے کا اضافی بوجھ بڑھ گیا ہے ۔

Tags: