سانحہ صفورا سمیت سندھ کے 18کیس فوجی عدالتو اں میں منتقل، نوٹیفکیشن جاری

December 11, 2015 12:23 pm0 commentsViews: 27

سندھ حکومت نے سانحہ صفورا کیس کا قانونی جائزہ لے کر فوجی عدالت میں بھیجنے کا فیصلہ کیا تھا ،مقدمہ انسداد دہشت گردی کی عدالت میں ہے
وزارت داخلہ نے بھی فوجی عدالت کو خط لکھ دیا، سانحہ صفورا میں بس پر فائرنگ کرکے اسماعیلی برادری کے 45افراد کو قتل کیا گیا تھا
کراچی(اسٹاف رپورٹر)وفاقی وزارت داخلہ نے سانحہ صفورا کیس سمیت سندھ کے18کیس فوجی عدالتوں کو بھیجنے کا نوٹیفیکیشن جاری کردیا ہے۔تفصیلات کے مطابق وفاقی وزارت داخلہ نے سانحہ صفورا کیس، سبین محمود کیس اور پولیس اہلکاروں پر حملے سمیت دیگر کیس فوجی عدالت کو بھیج دیئے ہیں۔ وزارت داخلہ نے سانحہ صفورا کیس کے حوالے سے فوجی عدالت کو خط لکھ دیا ہے جس میں کیس کی سماعت کی منظوری دی گئی ہے۔اس سے قبل حکومت سندھ نے سانحہ صفوار کیس فوجی عدالت میں بھیجنے کا فیصلہ کیا تھا۔ جس پرسندھ حکومت نے عدالت میں منتقلی سے متعلق تمام قانونی پہلوؤں کا جائزہ لے لیا تھا۔ وزیر اعلی سندھ سید قائم علی شاہ نے بھی کیس کی فوجی عدالت میں منظوری دیدی تھی۔واضح رہے کہ کراچی میں صفورا گوٹھ کے مقام پر دہشت گردوں نے13مئی2015کوبس پر فائرنگ کرکے اسماعیلی برادری کے45افراد کو قتل کردیا تھا جس میں ملوث کئی دہشت گرد گرفتار کیے جاچکے ہیں۔ سانحہ صفورا کا مقدمہ اس سے قبل کراچی کی انسدادِ دہشتگردی کی عدالت نمبر ایک میں زیرِ سماعت ہے۔