میری اور ذوالفقار مرزا کی جان کو خطرہ ہے، فہمیدہ مرزا

December 17, 2015 4:41 pm0 commentsViews: 38

وزیرداخلہ اور آئی جی سندھ کو خصوصی ٹاسک دیا گیا، انتقامی کارروائیاں اور جھوٹے مقدمات قائم کیے گئے
کرپشن کے خلاف آواز بلند کرنے پر ہمیں غدار کہا گیا، ہمیں ایسی غداری قبول ہے، سابق اسپیکر قومی اسمبلی
بدین(نیوز ڈیسک) قومی اسمبلی کی سابق اسپیکر ایم این اے ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے کہا ہے کہ مجھے اور ڈاکٹر ذو الفقار مرزا کی جان کو خطرہ ہے صو بائی وزیر دا خلہ اور آئی جی سندھ کو اس سلسلے میں خصوصی ٹاسک ملا ہوا ہے وہ تلہار میں انتخابی مہم کے آخری مرحلے میں ایک بڑے جلسہ عام سے خطاب کر رہی تھیں انہوں نے کہا کہ بدین کے ڈی آر او و ڈی سی اور ایس ایس پی کو بھی خاص ٹاسک دیا گیا ہے اس لیے ہم نے وفاقی حکوت اور الیکشن کمیشن سے بار بار مطا لبہ کر رہے ہیں کے 17 دسمبر کو ہو نے والے انتخا بات رینجرز اور فوج کی نگرانی میں کرا ئے جا ئیں انہو ںنے کہا کہ ہم نے پا رٹی میں بیٹھ کر عوام کے حقوق پیپلز پا رٹی کے ان کا رکنو ں کو دیئے جنہو ں نے پا رٹی کی خاطر بڑی قربا نیا ں دیں ۔ حقوق اور کرپشن کے خلاف آواز اٹھا ئی تو ہمیں غدار کہا گیا اور اگر عوام اور کا رکنو ں کی بات کرنا یا کرپشن کے خلاف بات کرنا غداری ہے تو ہمیں ایسی غداری قبول ہے لیکن ہم عوام کے ساتھ کبھی بھی غداری نہیں کرینگے انہو ں نے کہا کہ جس عوام نے پیپلز پا رٹی کی قیادت کو ووٹ دیکر ایوان تک پہنچا یا پا رٹی کی قیادت نے اس عوام سے دھو کہ کیا ۔انہوں نے کہا کے سندھ کے موجودہ حکمرانو ں نے پولیس کے ذریعے مخالفین کو انتقامی کار وائیو ں کا نشانہ بنا یا ہے ہما رے کا رکنو ں اور حما یتیوں کے خلاف جھوٹے مقدمات درج کرکے ان پر وفا داریا ں تبدیل کرنے کے لیئے دبا ئو ڈال رہے ہیں ان حکمرانو ں نے جمہوریت کو بھی ختم کردیا ہے۔