سیکورٹی خدشات ،شہرمیں درجنوں سی سی ٹی وی کیمرے خراب ہونے کا انکشاف

December 23, 2015 8:02 pm0 commentsViews: 32

کراچی میں بارہ ربیع الاول کے جلوس کی گزر گاہ پر لگائے جانے والے کیمرے بھی تاحال خراب پڑے ہوئے ہیں
کیمروں کی خرابی سے دہشت گردوں کوکامیابی مل سکتی ہے، مرمت کا کام تاحال شروع نہیں کرایا جاسکا
کراچی( کرائم رپورٹر) شہر میں عید میلاد النبی ﷺ پر سیکورٹی خدشات 12 ربیع الاول کے موقع پر حکام کی جانب سے سیکورٹی کے تمام دعوئوں کے برعکس جلوس کی گزر گاہوں پر نصب درجنوں سی سی ٹی وی کیمرے خراب ہونے کا انکشاف ہوا ہے ایم اے جناح روڈ پر مرمتی عملہ تاحال کسی بھی کیمرے کو فعال نہیں کر سکا ہے۔ پولیس حکام نے حکومت سندھ کے محکمہ آئی ٹی کو صورتحال کے حوالے سے آگاہ کر دیا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ کیمرے کی خرابی سے جلوس کی نگرانی مشکل اور دہشت گردوں کو کامیابی ملنے کا خدشہ ہے۔ ذرائع کے مطابق 12 ربیع الاول کے حوالے سے نکالے جانے والے جلوس کی سیکورٹی کیلئے حکام کی جانب سے بلند و بانگ دعوے کئے جا رہے ہیں اور اس حوالے سے روز ہی ایک مفصل رپورٹ مرتب کرکے حکام کو ارسال بھی کی جا رہی ہے تاہم ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ جلوس کی مرکزی کوگزرگاہ ایم اے جناح روڈ اور صدر میں نصب درجنوں سی سی ٹی وی کیمرے خراب ہو چکے ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ چہلم کے بعد پولیس کی جانب سے ایک رپورٹ مرتب کی گئی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ ایم اے جناح روڈ اور صدر میں نصب متعدد کیمرے خراب ہیں لہٰذا ان کی مرمت کے فوری اقدام کئے جائیں جبکہ بروقت مرمت نہ ہونے کی وجہ سے مزید کیمرے بھی خراب ہونے کا خدشہ ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ حکام کی اس رپورٹ کو متعلقہ محکمے کے افسران کی جانب سے نذر انداز کر دیا گیا اور 12 ربیع الاول کی سیکورٹی کے حوالے سے جب روٹ کی چیکنگ کی گئی تو انکشاف ہوا کہ مزید کیمرے بھی خراب ہو چکے ہیں۔ ذرائع نے دعویٰ کیا کہ اگر کیمرے بروقت درست نہیں کئے جا سکے تو جلوس اور تقریبات کی نگرانی انتہائی مشکل ہونے کے ساتھ دہشت گردی میں معاون بھی ثابت ہوگی۔

Tags: