متحدہ کے کارکن کے قتل میں ملوث پولیس افسر سمیت 2 افراد گرفتار ۔ دیگر جرائم و الزامات میں مزید گرفتاریاں

December 25, 2015 3:29 pm0 commentsViews: 19

سعید آباد تھانے کے اے ایس آئی نذیر پر عبدالقادر اسلم کو گھر سے گرفتار کرنے کے بعد تشدد کرکے قتل کا الزام ہے
کراچی(کرائم رپورٹر)پولیس نے شہر میں چھاپہ مارکارروائی کرتے ہوئے متحدہ قومی موومنٹ کے کارکن کے قتل میںملوث پولیس افسر سمیت دو ملزمان کو گرفتار کرلیا ۔تفصیلات کے مطابق موچکو انویسٹی گیشن پولیس نے سعیدآباد تھانے کی اسپیشل پارٹی چلانے والے افسر اے ایس آئی نذیر کو گرفتار کرلیا ،شعبہ تفتیش کے انچارج جان خان نیازی نے رابطہ کرنے پر بتایاکہ ملزم پر متحدہ قومی موومنٹ کے کارکن عبدالقادر اسلم کو گھرسے گرفتار کرنے کے بعد تشدد کر کے قتل اور لاش موچکو تھانے حدود میں پھیکنے کا الزام عائد ہے ،پولیس ملزم سے اسکے ساتھی پولیس اہلکاروں کے حوالے سے تفتیش کررہی ہے ،انھوں نے بتایا کہ ملزم نذیر مختلف بیانات تبدیل کررہا ہے تاہم پولیس مزید تفتیش کررہی ہے ۔کورنگی صنعتی ایریا پولیس نے قیوم آباد پر چھاپہ مار کر منشیات فروش نصیرعلی کو گرفتار کرکے منشیات برآمد کرلی ۔

ربیع الاول کے جلوس میں سینکڑوں افراد کی جیبیں کٹ گئیں‘ 5 ملزمان گرفتار
لائٹ ہائوس میں خواتین سے لوٹ مار کرنیوالے 2 ملزمان کو ایس پی کے اسکواڈ نے حراست میں لے لیا
گلبہار میں جلوس میں شریک 3 جیب کترے رنگے ہاتھوں عوام نے پکڑ لئے
کراچی( کرائم ڈیسک) عید میلاد النبیﷺ کے جلوس کے دوران سینکڑوں افراد موبائل فون سمیت دیگر قیمتی سامان سے محروم ہوگئے‘ خواتین سے لوٹ مار کرنیوالے5 ملزمان کو پولیس نے گرفتار کرلیا‘ جبکہ مرکزی جلوس سے3مشکوک افراد کو رینجرز نے حراست میں لیا ہے‘ جنہیں تفتیش کیلئے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا ہے‘ ایم اے جناح روڈ پر لائٹ ہائوس اور ڈینسو ہال کے قریب خواتین سے لوٹ مار کرنیوالے2 ملزمان کو ایس پی عابد قائم خانی کے اسکواڈ نے گرفتار کرکے کھارادر پولیس کے حوالے کیا۔ علاوہ ازیں گلبہار کے علاقے جلوس کے دوران لوگوں کی جیبیں کاٹتے ہوئے3 ملزمان کو لوگوں نے پکڑ کر پولیس کے حوالے کردیا۔ دریں اثناء لیاقت آباد‘ کورنگی‘ اورنگی‘ لانڈھی‘ گلبہار سمیت دیگر علاقوں سے نکلنے والے جلوسوں کے دوران سینکڑوں لوگوں کی جیبیں کٹ گئیں۔