کراچی کے فیصلے اسلام آباد میں ہونگے وزیراعظم نے وزیراعلیٰ سندھ کو وفاقی دارالحکومت میں طلب کرلیا

December 29, 2015 4:21 pm0 commentsViews: 21

وفاق صوبوں کی خود مختاری کا احترام کرتا ہے، سندھ میں مداخلت نہیں کررہے، وزیراعظم
پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت سے مشاورت کے بعد وزیراعلیٰ سندھ نے کل اسلام آباد جانے کا فیصلہ کرلیا، وزیراعظم کو براہ راست اپنے تحفظات سے آگاہ کریں گے، چوہدری نثار کے حوالے سے تحفظات بھی پیش کئے جائیں گے
اسلام آباد آجائیں، سب کو بلالیں گے اور مل بیٹھ کر مسئلے کا حل نکالیں گے، کراچی آمد پر وزیراعلیٰ سندھ کو وزیراعظم کی یقین دہانی ،چوہدری نثار براہ راست سندھ کے معاملات میں مداخلت کررہے ہیں، وزیراعلیٰ کی شکایت
کراچی( نیوز ایجنسیاں/ اسٹاف رپورٹر)کراچی کے اہم فیصلے اب اسلام آباد میں ہوں گے‘ رینجر زاختیارات اور دیگر معاملات پر بات چیت کیلئے وزیراعظم نواز شریف نے وزیراعلیٰ سندھ کو اسلام آباد میں طلب کرلیا‘ کراچی میں اس حوالے سے کوئی بات نہیں کی گئی‘ امن و امان کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیلئے کوئی اجلاس نہیں ہوا‘ ذرائع کے مطابق پیپلز پارٹی کی قیادت سے مشاورت کے بعد وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے اسلام آباد جانے کا فیصلہ کرلیا ہے‘ ذرائع کا کہناہے کہ وزیراعلیٰ سندھ کا بدھ کو اسلام آباد جانے کا امکان ہے‘ ذرائع کے مطابق پیپلز پارٹی میں سندھ حکومت کے معاملات میں مداخلت کے حوالے سے مشاورت کا سلسلہ جاری ہے‘ تاہم وقتی طور پر وزیراعظم کی سطح پر معاملات کو حل کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے‘ اس سلسلے میں پہلے مرحلے میں پارٹی قیادت نے وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ کو وزیراعظم سے ملاقات کا ٹاسک دیا ہے اور انہیں براہ راست اپنے تحفظات سے آگاہ کرنے کی ہدایت کی ہے‘ ذرائع کے مطابق اب سید قائم علی شاہ اسلام آباد میں وزیراعظم میاں محمد نواز شریف سے خصوصی ملاقات میں سندھ حکومت کے معاملات کے حوالے سے اپنے تحفظات سے آگاہ کریں گے اور وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کے حوالے سے بھی اپنے تحفظات وزیراعظم کے سامنے رکھیں گے‘ ذرائع کا کہنا ہے کہ پیپلز پارٹی کی قیادت نے فیصلہ کیاہے کہ اگر وزیراعظم کی جانب سے کوئی مثبت جواب نہیں ملتا تو پھر دیگر آپشنز پر غور کیا جائیگا‘ جن میں پارلیمنٹ میں احتجاج اور پھر وفاق حکومت کیخلاف سڑکوں پر احتجاج کیا جائیگا بصورت دیگر عدالت سے رجوع کیا جائیگا۔علاوہ ازیں کراچی آمد کے موقع پروزیر اعظم میاں محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ وفاق صوبوں کی خود مختاری کا احترام کرتا ہے ۔ یہ تاثر غلط ہے کہ ہم سندھ میں مداخلت کرر ہے ہیں ۔ سندھ حکومت کے تحفظات کو قانون اور آئین کے مطابق حل کریں گے ۔و زیر اعلیٰ اسلام آباد آجائیں گے ۔ سب کو بلا لیں گے ۔ مل بیٹھ کر بات کریں گے ۔ مسئلے کا حل نکال لیں گے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے کراچی ایئرپورٹ پر وزیر اعلیٰ سندھ سے مختصر ترین ملاقات میں غیر رسمی گفتگو میں کیا ۔ انتہائی باخبر ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیر اعلیٰ سندھ نے وزیر اعظم سے مختصر ملاقات میں اس بات کا شکوہ کیا کہ وفاق رینجرز کے اختیارات کے معاملے پر سندھ حکومت کے تحفظات کو سن نہیں رہا ہے اور وفاقی وزیر داخلہ براہ راست سندھ حکومت کے امور میں مداخلت کر رہے ہیں ۔ آپ بھی ہماری نہیں سن رہے ہیں ۔ آپ بتائیں ہم کیا کریں ۔ جس پر وزیر اعظم نے وزیر اعلیٰ سندھ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آپ سینئر سیاست دان ہیں ۔ مسائل بات چیت سے حل ہوتے ہیں ۔ ہم آپ کی حکومت کے امور میں مداخلت نہیں کر رہے ۔ وفاق اور سندھ حکومت مل کر کراچی میں آپریشن کو جاری رکھیں گے ۔ آپ کے تمام تحفظات کو سنیں گے ۔ وہاں سب کو بلائیں گے ۔ بات چیت سے مسئلہ حل کریں گے ۔ وزیر اعظم نے کہا کہ وفاق صوبوں کی خود مختاری کا احترام کرتا ہے ۔ وفاق تمام مسائل مذاکرات سے حل کرنے پر یقین رکھتا ہے ۔ وزیراعظم میاں محمدنواز شریف پیرکی صبح ایک روزہ دورے پرکراچی پہنچنے وزیراعلی سندھ سیدقائم علی شاہ نے ایئرپورٹ کا استقبال کیا اور مختصرسی ملاقات کی ۔ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ سید قائم شاہ نے ایئرپورٹ پر وزیر اعظم سے کہا کہ آپ سے ضروری بات کرنی ہے ۔ ملاقات کے لیے وقت دیں ۔ وزیر اعظم نے وزیر اعلیٰ سے استفسار کیا کہ کس بارے میں بات کرنا چاہتے ہیں ۔ وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے کہا کہ آپ کے ایک وزیر اور رینجرز اختیارات سے متعلق بات کرنا ہے ۔ جس پر وزیر اعظم نے کہا کہ آپ اسلام آباد آجائیں ۔ سب کو بلالیں گے اور مکمل بات سنی جائے گی ۔بعد ازاں وزیراعظم پورٹ قاسم روانہ ہوگئے جبکہ وزیراعلی سندھ ان کے ہمراہ پورٹ قاسم جانے کے بجائے چیک اپ کے لیے قومی ادارہ برائے امراض قلب پہنچ گئے جہاں انہوں نے ای سی جی سمیت دیگر ضروری ٹیسٹ کرائے اور2گھنٹے تک اسپتال کے پرائیوٹ ونگ میں گزارے۔ترجمان وزیراعلیٰ ہائوس کا کہنا ہے کہ وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ کے دل میں کوئی تکلیف نہیں ہوئی وہ گزشتہ کئی دنوں سے مسلسل کام کررہے تھے اور سخت شیڈول کی وجہ سے تھک گئے تھی اسی لیے وزیراعظم کا استقبال کرنے کے بعد قومی ادارہ برائے امراض قلب گئے جہاں انہوں اپنا معمول کا چیک اپ کرایا ۔ ڈاکٹرزنے انہیں مکمل فٹ قراردیا ہے تاہم کہاکہ کہ آپ آرام کریں تاکہ آپ کی تھکاوٹ دور جاہے۔

وزیر اعظم کا کراچی میں ہیلی کاپٹر
میں سفر، عوام ٹریفک جام سے بچ گئے
کراچی( اسٹاف رپورٹر) وزیر اعظم نواز شریف نے کراچی میں دورے کے دوران ہیلی کاپٹر میں سفر کیا جس کے باعث ٹریفک رواں دواں رہا۔ نواز شریف پیر کو کراچی ایئر پورٹ سے سیدھا پورٹ قاسم پہنچے اور وہاں سے صنعت کاروں کی تقریب میں شرکت کیلئے گئے۔ ذرائع کے مطابق وزیر اعظم نے عوام کو ٹریفک کی زحمت سے بچانے کیلئے پروٹوکول لینا پسند نہیں کیا۔

کراچی میں کامیاب آپریشن، وزیر اعظم کی ڈی جی رینجرز اور چیف سیکریٹری سندھ کو مبارک باد
کراچی( اسٹاف رپورٹر) وزیر اعظم نواز شریف نے وفاق ایوان ہائے صنعت و تجارت( ایف پی سی سی آئی) کی تقریب میں کراچی کامیاب آپریشن پر ڈی جی رینجرز، آئی جی سندھ اور چیف سیکریٹری اور انتظامیہ کو مبارک باد دی لیکن انہوں نے کراچی آپریشن کے کپتان وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ اور سندھ حکومت کا ذکر تک نہ کیا اس پر سیاسی حلقوں نے حیرت کا اظہار کیا ہے۔