واٹر بورڈ کے زیر زمین ہائیڈرنٹس کیخلاف آپریشن 8مسمار

January 1, 2016 2:31 pm0 commentsViews: 26

پاک کالونی، گٹر باغیچہ، منگھوپیر،سائٹ اور یار محمد گوٹھ میں کارروائیاں، ایف آئی آر درج
بورنگ کے پانی کے نام پر واٹر بورڈ کی لائنوں سے پانی چوری کیا جارہا تھا، علاقہ مکینوں کاخیر مقدم
کراچی(اسٹاف رپورٹر)کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کی ڈیمالیشن ٹیم نے جمعرات کو زیر زمین ہائیڈرنٹس کے خلاف آپریشن کرتے ہوئے پاک کالونی، گٹر باغیچہ ،منگھوپیر سائٹ اور یار محمد گوٹھ اور ملحقہ علاقوں میں8 ہائیڈرنٹس گرادئے ،41 واٹر ٹینکرز قبضہ میں لے کرFIR درج،زیر زمین پائپ لائنیں اکھاڑ کر تنصیبات گرادیں،تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کے احکامات کی روشنی میں واٹر بورڈ کا چوتھے مرحلہ میں زیرِ زمین پانی کے ہا ئیڈرنٹس کے خلاف جمعرات کو سب سے بڑا آپریشن رینجرز اور علاقہ پولیس کی بیک سپورٹ سے شروع ہوا، رقبہ کے لحاظ سے آج سب سے بڑے علاقہ میں آپریشن کرتے ہوئے8ہائیڈرنٹس کو مسمار کر دیا گیا، سینکڑوں فٹ پائپ اور دوسرا سامان ضبط کر لیا، ان ہائیڈرنٹس میں بورنگ کے پانی کے نام پر واٹر بورڈ کی لائنوں سے پانی چوری کیا جا رہا تھا، ایم ڈی واٹر بورڈ مصباح الدین فرید کی ہدایت پر واٹر بورڈ کے ڈیمالیشن اسکواڈ نے ظفرعلی پلیجو سپر نٹنڈنگ انجینئر واٹر ٹرنک مین CSO میجر(ر)محمد نواز گوندل، آصف قادری، پاکستان رینجرز سندھ، علاقائی پولیس اور ضلعی انتظامیہ کی نگرانی میں کامیابی سے آپریشن کیا ، پاک کالونی پولیس کی حدود میں گٹر باغیچہ میں قائم بہت بڑا ہائیڈرنٹ مسمار کر کے 41واٹر ٹینکرز قبضہ میں لے کر FIR درج کرا دی گئی،عزیر ہائیڈرنٹ جو وسیع علاقہ میں قائم تھا جسے مختلف افراد مل کر چلا رہے تھے جہاں بورنگ کے نام پر واٹر بورڈ کی 36انچ کی لائنوں سے پانی چوری کیاجارہا تھا۔ آپریشن کے دوران کسی بھی قسم کی مزاحمت نہیں ہوئی۔ان علاقوں کے مکینوں کا خیرمقدمی جو ش و خروش رہا اور اقدامات کو سراہا گیا کیونکہ زیر زمین پانی کے ان ہائیڈرنٹس سے ان علاقوں میں پانی کی قلت کا سامنا تھا۔