اے کے ڈی گروپ پر کرائم میں معاونت کا الزام ہے‘ ایف آئی اے

January 6, 2016 5:31 pm0 commentsViews: 23

ای او بی آئی میں کروڑوں روپے کی کرپشن پر 4 سال سے چھان بین کررہے ہیں
قومی خزانے کو290 ملین روپے کانقصان پہنچانے کی تحقیقات شفاف کی جارہی ہیں
کراچی (اسٹاف رپورٹر) فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے) کمرشل بینکنگ سرکل کے ڈپٹی ڈائریکٹر الطاف حسین نے کہا ہے کہ اے کے ڈی گروپ پرکرائم میں معاونت کا الزام ہے،اس سلسلے میں چھان بین کی گئی جبکہ تحقیقات جاری ہیں۔ ای او بی آئی کیس میں قومی خزانے کو 290 ملین روپے کا نقصان پہنچانے کی تحقیقات پیشہ وارانہ اور شفاف انداز میں کی جا رہی ہیں۔ یہ بات انہوں نے منگل کو پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ ای او بی آئی کیس کی تحقیقات اور بعد ازاں مقدمہ کا اندراج مکمل طور پر پیشہ وارانہ اور قانونی تقاضوں کے مطابق کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ای او بی آئی میں کروڑوں روپے کی کرپشن پر چار سال سے تحقیقات کررہے ہیں ، سرکاری افسران پر اربوں کی کرپشن کا الزام ہے۔کیس میں نامزد ملزمان کی گرفتاری کیلئے کوشش کی جارہی ہیں۔اے کے ڈی گروپ پرکرائم میں معاونت کا الزام ہے۔ایف آئی اے حکام کا یہ بھی کہنا تھا کہ ای اوبی آئی،اسٹاک ایکسچینج،سی ڈی سی سے رکارڈحاصل کرکے چھان بین کی گئی۔یہ کیس4ڈائریکٹرز کی موجودگی میں چلتارہاہے، تاہم انہوں نے وضاحت کی ہے کہ شاہد حیات کے دور میں یہ انکوائری شروع نہیں ہوئی۔انہوں نے کہا کہ اس کیس میں مجموعی طور پر 22 افراد نامزد ہیں جن میں 7 کا تعلق ایم ایس اے کے ڈی سیکورٹیز سے ہے۔