بلدیہ کے اسپتالوں میں ادویات ختم، مریض اذیت میں مبتلا

January 11, 2016 6:15 pm0 commentsViews: 75

ٹینڈر نہ ہونے سے بحرانی کیفیت پیدا ہوگئی، ایڈمنسٹریٹرنے بعض افسران کی خوشنودی کیلئے ٹینڈر منسوخ کرادیا
غریب مریض نزلہ زکام کی دوابھی اسٹور سے لینے پر مجبور، ٹینڈرذاتی اختلافات کی وجہ سے مسنوخ کردیا گیا، ذرائع
کراچی(سٹی رپورٹر)بلدیہ کراچی کے ہسپتالوں میں ادویات ختم، ٹینڈر نہ ہونے سے بحرانی کیفیت پیدا ہوگئی،ایڈ منسٹریٹر کراچی بعض افسران کی خوشنودی کیلئے ٹینڈر منسوخ کراکر چھٹیوں پر چلے گئے،عباسی شہید ہسپتال سمیت بلدیہ کے دیگر اسپتالوں میں مریض سخت اذیت سے دوچار،غریب مریضوں کا اعلی حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ۔تفصیلات کے مطابق بلدیہ عظمی کراچی کے ہسپتال بغیر ادویات کے چلائے جانے لگے ہیں جہاں کسی قسم کی ادویات موجود نہیں ہیں ،ذرائع کا کہنا ہے کہ ادویات کی فراہمی کا ٹینڈر نہ کئے جانے کے باعث ہسپتالوں کو ادویات کی فراہمی بند ہے اس کیلئے گذشتہ چند روز قبل ٹینڈر طلب کئے گئے تھے تاہم ایڈ منسٹریٹر کراچی سجاد حسین عباسی کے قریبی افسران نے اپنی ذاتی اختلافات کے باعث مذکورہ ٹینڈر کو منسوخ کرادیا تھا،ذرائع کا کہنا ہے کہ مذکورہ ٹینڈر نہ ہونے سے بلدیہ کراچی کے ہسپتالوں میں ادویات مکمل طور پر ختم ہوچکی ہیں جس کے باعث غریب مریض معمولی نزلہ اور زکام کی ادویات بھی میڈیکل اسٹورز سے خریدنے پر مجبور ہوگئے ہیں،بلدیہ کراچی کے ذرائع کا کہنا ہے کہ ایڈ منسٹریٹر کراچی کے بعض قریبی افسران محکمہ میڈیکل اینڈ ہیلتھ سروسز کو ناکام بنانے کیلئے غریب مریضوں کی جانوں سے کھیلنے میں مصروف ہیں۔