جلال آباد، پاکستانی قونصل خانے پر داعش کا خودکش حملہ، 7پولیس اہلکار 4حملہ آور ہلاک

January 14, 2016 2:17 pm0 commentsViews: 23

خودکش حملہ آور 3ساتھیوں سمیت قونصل خانے میں داخل ہونے میں ناکام، خودکش بمبار نے پولیس کی گاڑیوں کو نشانہ بنایا،3 حملہ آور جوابی فائرنگ سے مارے گئے
داعش نے حملے کی ذمہ داری قبول کرلی، حملہ پاکستانی قونصل خانے پر کیا گیا، افغان حکام کی تصدیق، دھماکے میں متعدد پولیس اہلکار اور 3بچے شدید زخمی ہوئے
جلال آباد/ اسلام آباد( نیوز ایجنسیاں) افغان شہر جلال آباد میں پاکستانی قونصل خانے کے قریب خود کش حملہ، 7 پولیس اہلکاروں سمیت8 افراد مارے گئے اور خود کش بمبار سمیت4 حملہ آور بھی مارے گئے۔ افغان حکام کے مطابق حملہ آوروں نے فائرگ اور خود کش دھماکہ کیا، داعش نے حملے کی ذمہ داری قبول کرلی، پاکستان کی جانب سے حملے کی مذمت۔ افغان حکومت سے مکمل تحقیقات اور ذمہ داروں کو کٹہرے میں لانے کا مطالبہ۔ میڈیا رپورٹوں کے مطابق جلال آباد میں پاکستانی قونصل خانے کے قریب مسلح افراد نے پولیس کی گاڑیوں پر اندھا دھند فائرنگ کی اسی دوران ایک خود کش حملہ آور نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔ حملے کے نتیجے میں 7 پولیس اہلکاروں سمیت8 افراد مارے گئے جبکہ متعدد پولیس اہلکار اور3 بچے زخمی ہوئے خاما پریس کی رپورٹ کے مطابق ننگر ہار پولیس چیف عطاء اللہ گیانی نے تصدیق کی کہ حملہ خود کش تھا جبکہ افغانستان کے وزارت داخلہ کے ترجمان صادق صدیقی نے 7 پولیس اہلکاروں کی ہلاکت کی تصدیق کی۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ حملہ پاکستانی قونصل خانے کے قریب کیا گیا۔ قریب ہی ہندوستان اور ایران کے قونصل خانے بھی واقع ہیں۔ سیکورٹی حکام کے مطابق قونصل خانے کو نشانہ بنانے کیلئے خود کش حملہ کیا گیا جبکہ خود کش حملہ آور کے دیگر3 ساتھیوں نے قونصل خانے میں داخل ہونے کی کوشش کی البتہ سیکورٹی اہلکاروں سے فائرنگ کے تبادلے میں تمام حملہ آور مارے گئے خبر رساں ادارے کے مطابق دھماکہ خود کش تھا۔ جس میں پاکستان کے قونصل خانے کو نشانہ بنایا گیا۔ افغان وزارت داخلہ کے مطابق حملہ آوروں نے پاکستان کے قونصل خانے کے قریب کھڑی پولیس کی گاڑیوں کو صبح 8 بج کر 50منٹ پر نشانہ بنایا۔

جلال آباد میں پاکستانی قونصل خانے پر حملے میں ’’را‘‘ ملوث نکلی
بھارتی ایجنسی نے افغان نیشنل آرمی کے لوگوں کے ساتھ مل کر دستی بم پھینکے، رپورٹ
حملہ آور قونصل خانے کا ریکارڈ حاصل کرنا چاہتے تھے جس میں ناکام ہوگئے
جلال آباد( مانیٹرنگ ڈیسک) افغان شہر جلال آباد میں پاکستانی قونصل خانے پر حملے میں بدنام زمانہ بھارتی ایجنسی را اور افغان نیشنل آرمی ملوث نکلی‘ نجی ٹی و ی کے مطابق اس بات کے شواہد بھی مل گئے ہیں کہ ان دونوں تنظیموں سے تعلق رکھنے والے افراد نے یہ حملہ کیا‘ ذرائع کے مطابق را اور افغان نیشنل آرمی کے لوگوں نے قونصل خانے پر دستی بم پھینکے ‘ اس حملے کا مقصد عملے کو خوفزدہ کرنا تھا‘ سادہ کپڑوں میں ملبوس افراد نے حملہ کیا‘ حملہ آور قونصل خانے کا ریکارڈ حاصل کرنا چاہتے تھے لیکن وہ اس میں ناکام ہوگئے۔