ہائی وے ڈیپارٹمنٹ ٹھٹھہ میں کروڑوں کی بے قاعدگیاں

January 14, 2016 3:15 pm0 commentsViews: 22

شہری نے سندھ ہائی کورٹ میں پٹیشن دائر کرکے بھانڈا پھوڑ دیا، چیف انجینئر اور ڈپٹی کمشنر عدالت طلب
ٹھٹھہ(رپورٹ حنیف جاکھرو)ہائی وے ڈپارٹمنٹ ٹھٹھہ میں کروڑوںروپے کی بے قا عدگیوں کا انکشاف ، ٹھٹھہ کے ایک شہری نے پٹیشن داخل کرکے ڈپارٹمنٹ میں کرپشن کا بھا نڈا پھو ڑ دیا ہے ، سندھ ہا ئی کورٹ کی ڈبل بینچ نے چیف انجینئر اور ٹھٹھہ کے ڈپٹی کمشنر کو 3فروری کو طلب کرلیا ہے ، ٹھٹھہ کے ایک شہری شفیع محمد کھیو نے سندھ ہا ئی کورٹ میں پٹیشن دا خل کرا ئی ہے کہ ڈپارٹمنٹ میں سیا سی پشت پنا ہی اور من پسند ٹھیکیداری نظام رائج قا ئم کر نے کے باعث کچھ سا لو ں سے ترقیا تی اسکیموں کے نام پر کرو ڑوں رو پے کی مبینہ کرپشن کی گئی ہے ، اور صرف کا غذوں تک محدود اسکیموں کو مکمل دکھا کر ایک مرتبہ پھر من پسند ٹھیکیداروں میں کروڑوںروپے کے فنڈ جا ری کرکے قو می خزانے کو کروڑوںرو پے کا نقصان پہنچا یا گیا ہے ، سندھ ہا ئی کورٹ کے ڈبل بینچ جسٹس اظہر رضوی اور جسٹس عزیز الرحمان کی عدالت نے پٹیشن کو منظور کرتے ہوئے ہائی وے ڈپارٹمنٹ کے چیف انجینئر بشیر میمن ٹھٹھہ کے ڈپٹی کمشنر ندیم الرحمان میمن اور دیگر عملداروں کو 3فروری کو طلب کرنے کے نوٹس جا ری کردیے ہیں ، واضح رہے کہ ہائی وے ڈپارٹمنٹ ٹھٹھہ میں کرو ڑوں روپے کی مبینہ کرپشن کے خلاف سا بق ناظم سید نصیر شا ہ شیرا زی نے پہلے ہی پٹیشن دا خل کرا ئی ہے ، اورکروڑوں روپے کی مبینہ کرپشن کے خلاف ٹھٹھہ کے شہریوں نے احتساب بیورو کو درخواستیں ہیںہے کہ مبینہ کرپشن میں ملوث افسران کے خلاف انکوائری کرکے کارروائی کی جا ئے ۔