بلدیاتی الیکشن کے بعد کے ایم سی کو کمزور کردیا گیا، عارف علوی

January 18, 2016 3:12 pm0 commentsViews: 27

سندھ حکومت نے تمام بلدیاتی اختیارات وزیربلدیات کو سونپ دیے ہیں، تحریک انصاف کے رہنما کی پریس کانفرنس
کراچی( اسٹاف رپورٹر) پاکستان تحریک انصاف کے رہنما رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ بلدیاتی انتخابات کے بعد کے ایم سی کو کمزور کردیا گیا ہے‘ بلدیاتی حکومتوں کو تاحال اختیارات نہیں دیئے گئے‘ سارے اختیارات وزیر بلدیات کو سونپ دیئے گئے ہیں‘ بلدیاتی حکومتوں کے پاس فنڈز نہیں‘ منتخب بلدیاتی نمائندے کیسے کام کریں گے‘ حکومت سندھ ہوش کے ناخن لے‘ بلدیاتی حکومتوں کو اختیارات دے‘ سندھ اسمبلی میں کرمنلز پراسیکیوشن بل کی منظوری کی مذمت کرتے ہیں‘ تھرپارکر میں پینے کے پانی کا بحران شدت اختیار کرتا جارہا ہے‘ حکومت اس جانب توجہ دے‘ انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ گنے کی قیمت185 مقرر کی جائے اور گنے کی ایکسپورٹ پر سبسڈی ختم کی جائے‘ ان خیالات کااظہار انہوں نے اتوار کو اپنی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ثمر علی خان‘ عبدالمجید‘ زبیر تالپور اور دیگر بھی مووجد تھے‘ ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ کراچی کی بلدیاتی حکومت کا 119 کروڑ کا بجٹ اور اس کے اختیارات وزیر بلدیات اور ڈی ایم سیز کے پاس ہیں بلدیات میں سب سے زیادہ رقم کا استعمال بل بورڈز اور ایڈور ٹائزنگ کی مد میں ہورہا ہے اور یہ کھربوں روپے کی رقم ہے لیکن اسکا حق کراچی کو نہیں مل رہا ہے‘ اگر یہ پیسہ کراچی کے لوگوں کو مل جائے تو کراچی کے پاس اپنے وسائل آجائیں۔