ایمپریس مارکیٹ کے سامنے فوڈ اسٹریٹ بنانے کا منصوبہ

January 19, 2016 5:35 pm0 commentsViews: 40

گاڑیوں کا داخلہ بند، ایمپریس مارکیٹ کے چاروں اطراف سے پتھارے ہٹا کر خوبصورت کیبن اور چھوٹے اسٹال بنائے جائیں گے
منصوبے پر 15کروڑ67 لاکھ روپے لاگت آئے گی، رینبو سینٹر میں پارکنگ پلازہ بند، پیدل چلنے والوں کیلئے گزر گاہ بنائی جائے گی
کراچی( نیوز ڈیسک) حکومت سندھ نے تاریخی عمارت ایمپریس مارکیٹ کی اصل شکل میں بحالی کے ساتھ اس کے سامنے والی سڑک پر گاڑیوں کا داخلہ بند کرکے پیدل گزر گاہ بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ساتھ ہی عالمی طرز کی فوڈ اسٹریٹ بنائی جائیگی ساتھ ہی ایمپریس مارکیٹ کے چاروں اطراف پتھارے، کھوکھے وغیرہ ہٹا کر عالمی معیار کے مطابق خوبصورت ، کیبن، چھوٹے اسٹال وغیرہ بنائے جائیں گے۔ لکی اسٹار کی طرف جانے والی ایک سڑک کو بھی بند کرکے فوڈ اسٹریٹ بنانے کا منصوبہ تیار کیا ہے۔ اس ضمن میں تقریباً15 کروڑ 67 لاکھ لاگت سے منصوبہ بنایا گیا ہے۔ جن میں سے9 کروڑ87 لاکھ 20 ہزار روپے محکمہ خزانہ نے جاری بھی کر دئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق مارکیٹ کی تاریخی حیثیت بحال کرنے کیلئے منصوبہ تیار کرلیاگیا ہے۔ جس کے تحت ایمپریس مارکیٹ کے سامنے والے علاقے نیو پریڈی اسٹریٹ سے آنے والی سڑک کو صدر رینبو سینٹر کے قریب پارکنگ پلازہ پر بند کردیا جائے گا مذکورہ علاقے کو پیدل گزر گاہ کے طور پر استعمال کیا جائے گا۔ یہاں جدید طرز کی پیدل گزر گاہ بنا کر وہاں پر خوبصورت رنگ برنگے چھوٹے چھوٹے اسٹال بنائے جائیں گے۔ اس طرح ایمپریس مارکیٹ کے بالکل سامنے لکی اسٹار کی جانب جانے والی سڑک پر بھی گاڑیوں کا داخلہ بند ہوگا۔ علاقے کی تمام عمارتوں کی تزئین بھی منصوبے میں شامل ہے پورا علاقہ فوڈ اسٹریٹ اور عالمی معیار کے خریداری مرکز کے طور پر ترتیب دیا جائیگا، جس میں لوگوں کے بیٹھنے وغیرہ کا بھی بندوبست ہوگا۔ جہاں ابتدا میں شٹل سروس، جبکہ آگے چل کر ٹرام چلانے پر بھی غور کیا جا رہا ہے۔ نیو پریڈی اسٹریٹ اور ایم اے جناح روڈ سے آنے والی ٹریفک کو موڑ کر صدر کی وہ سڑکیں جو ٹریفک کیلئے کھلی ہوں گی ان میں ٹریفک کی روانی بہتر بنانے کا بھی منصوبہ ہے۔