بجلی چوری کے خاتمے کیلئے نیو الیکٹرک سٹی ایکٹ مارچ سے نافذ ہوگا

January 19, 2016 5:46 pm0 commentsViews: 26

نئے نظام سے بجلی چوری کے کیسوں کو جلد نمٹایا جا سکے گا، گزشتہ12 ماہ میں لائن لاسز میں19 سے18 فی صد کمی ہوگی
اسلام آباد (آن لائن) حکومت ملک بھر سے بجلی چوری کے خاتمے کے لئے ایسا سسٹم بنا رہی ہے جس سے بجلی چوروں سے متعلقہ کیسز کو ہینڈل کیا جا سکے گا۔ یہ نظام مارچ2016 کے آخر میں شروع کر دیا جائے گا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق پاکستان نے عالمی مالیاتی فنڈ ( آئی ایم ایف ) سے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ ملک سے بجلی چوری کے خاتمے کے لئے وزارت قانون سے مل کر ایسا نظام لا رہے ہیں جو کہ بجلی چوری کے کیسز کو نمٹائے گا اور یہ نظام مارچ2016 میں نافذ العمل ہو گا پاکستان کا کہنا ہے کہ تمام اسٹیک ہولڈر سے مل کر صوبوں میں گورننس کی بہتری کے لئے نیو الیکٹرک سٹی ایکٹ تیار کیا تھا جسے 2 اکتوبر 2015 میں مشترکہ مفادات کونسل میں بھیجا تھا تاکہ مارچ2016 میں اسے صوبوں میں نافذ کیا جا سکے ۔ پاکستان نے مزید آئی ایم ایف کو بتایا کہ گزشتہ12 ماہ میں مجموعی طور پر لائن لائسسز میں19 سے 18 فیصد تک کمی واقع ہوئی ہے جبکہ اسی دوران88 سے90 فیصد ریکوریاں ہوئی ہیں۔