سندھ ریزروپولیس کے برطرف اہلکاروں کا احتجاجی مظاہرہ

January 19, 2016 6:07 pm0 commentsViews: 82

پریس کلب پر سکھر سے آنیوالے مظاہرین ہاتھوں میں بینرز اور پلے کارڈ اٹھائے بحالی کے نعرے لگارہے تھے
چار سال ڈیوٹی دینے کے باوجود 174اہلکاروں کو کوئی وجہ بتائے بغیر برطرف کردیا، نعیم اختر، سائیں بخش
کراچی( اسٹاف رپورٹر) سندھ ریزرو پولیس سکھر سے تعلق رکھنے والے برطرف اہلکاروں نے اپنی بحالی کیلئے کراچی پریس کلب کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا‘ برطرف پولیس اہلکاروں نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اور بینرز اٹھارکھے تھے جن پر بحالی کے حوالے سے نعرے درج تھے‘ برطرف پولیس اہلکاروں نعیم اختر سائیں بخش نے میڈیا کو بتایا کہ سندھ ریزور پولیس میں سکھر ڈویژن میں501 اہلکاروں کو 2012 ء میں بھرتی کیا گیا تھا اور 4 سال تک پولیس میں خدمات انجام دیں کراچی میں رزاق آباد میں ٹریننگ سینٹر میں ہونیوالے دھماکے میں اسی ریزرو فورس کے2 اہلکار غلام حسین اور سعید احمد شہید اور عمر حسین زخمی ہوئے تھے لیکن پولیس کے اعلیٰ حکام نے بغیر کسی وجہ کے174 اہلکاروں کو نوکری سے برطرف کردیا ہے‘ انہوں نے کہا کہ ہمارے گھروں میںفاقہ کشی کی نوبت آگئی ہے‘ انہوں نے چیف جسٹس آف پاکستان ‘وزیراعلیٰ سندھ اور آئی جی سندھ سے اپیل کی کہ ہمیں ملازمتوں پر بحال کیا جائے اور واجبات ادا کئے جائیں۔