سعودی عرب، ایران تنازع کا خاتمہ مقدس مشن ہے، نواز شریف

January 20, 2016 3:23 pm0 commentsViews: 25

دونوں ممالک سے بات چیت نے ہمیں حوصلہ دیا، دونوں ایک دوسرے کو دشمن نہیں سمجھتے
انتہا پسندی اور دہشت گردی کا مقابلہ مل کر کرنا ہوگا، صدر روحانی سے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو
تہران( مانیٹرنگ ڈیسک)وزیراعظم محمد نواز شریف نے سعودی عرب اور ایران کے درمیان کشیدگی کے خاتمے کیلئے اپنے دورے پر اطمینان کااظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک سے بات چیت نے ہمیں حوصلہ دیا ہے‘ ایران اور سعودی عرب سے مثبت جواب ملا‘ سعودی عرب اور ایران بات چیت کیلئے بھی تیار ہیں‘ دونوں ایک دوسرے کو دشمن نہیں سمجھتے‘ پاکستان میزبانی کرنا چاہتا ہے‘ ایران آمادہ ہے‘ سعودی عرب سے بات کریں گے‘ ایران نے تنازع کے سلسلے میں فوکل پرسن مقرر کرنے پر اتفاق کیا ہے‘ سعودی عرب سے بھی ایسا کرنے کا کہیں گے جبکہ پاکستان بھی اپنا فوکل پرسن مقرر کریگا‘ سعودی عرب اور ایران بات چیت کیلئے بھی تیار ہیں‘ دونوں ملک ایک دوسرے کو دشمن نہیں سمجھتے‘ پاکستان میزبانی کرنا چاہتا ہے‘ ایران آمادہ ہے‘ سعودی عرب سے بات کریں گے‘ ایران تنازع فوکل پرسن مقرر کرنے پر اتفاق کیا ہے‘ سعودی عرب سے بھی ایسا کرنے کا کہیں گے جبکہ پاکستان بھی اپنا فوکل پرسن مقرر کریگا‘ سعودی عرب اور ایران کے تنازع کا خاتمہ مقدس مشن ہے‘ کسی کے کہنے پر نہیں خود مصالحت کرانے کا فیصلہ کیا‘ سعودی عرب اور ایران کودہشت گردی کے خطرے کا ادراک ہے‘ انتہا پسندی اور دہشت گردی بڑے چیلنج ہیں‘ جن کا مل کر مقابلہ کرنا ہوگا‘ منگل کو ایرانی صدر حسن روحانی کیساتھ ملاقات کے بعد وزیراعظم نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان اپنا فرض نبھا رہا ہے ‘دونوں برادر ممالک نے کشیدگی ختم کرانے کیلئے پاکستان کی کوششوں کو سراہا ہے۔