قوم دہشت گردوں سے چھٹکارا پانے کا عزم کر چکی ہے، آصف زرداری

January 21, 2016 12:18 pm0 commentsViews: 25

چارسدہ یونیورسٹی میں بربریت کی سزا دہشت گردوں کو ضرور ملے گی یہ ایک بڑا واقعہ ہے
آرمی پبلک اسکول پر حملے کے ایک سال بعد اتنا بڑا واقعہ پیش آنا نیشنل ایکشن پلان پر سوالیہ نشان ہے
کراچی( اسٹاف رپورٹر) پیپلز پارٹی پارلیمنٹرین کے صدر اور سابق صدر مملکت آصف علی زرداری نے بدھ کی صبح باچا خان یونیورسٹی چار سدہ میں دہشت گردوں کے حملے کی شدید مذمت کی ہے جس میں درجنوں معصوم افراد شہید اور درجنوں زخمی ہوئے انہوں نے کہا کہ اس بربریت کی سزا دہشت گردوں کو ضرور ملے گی اور پاکستانی قوم ہر صورت میں دہشت گردوں اور انتہا پسندوں سے چھٹکارا پانے کا عزم کر چکی ہے انہوں نے کہا کہ آرمی پبلک اسکول پشاور پر دہشت گردوں کے حملے کے ایک سال بعد ہی چار سدہ یونیورسٹی میں اتنا بڑا واقع رونما ہوجانا نیشنل ایکشن پلان پر عملدر آمد کے متعلق سوالات اٹھاتا ہے اور اس کیلئے غور و خوض ضروری ہے آصف زرداری نے مزید کہا کہ یہ انتہائی افسوسناک امر ہے کہ آرمی پبلک اسکول پر حملے کے بعد نیشنل ایکش پلان اتفاق رائے سے بنایا گیا تھا لیکن اس پر اس کی روح کے مطابق عملدر آمد نہ ہو سکا، نیکٹا اب تک غیر فعال ہے۔ مدارس کو اب تک رجسٹرڈ نہیں کیا گیا۔ کالعدم تنظیمیں نئے ناموں کیساتھ بغیر کسی روک و ٹوک اپنا کام جاری رکھے ہوئے ہیں انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت ایک اعلیٰ سطحی نمائندہ وفد چار سدہ بھیجنے میں ناکام رہی اور اس کی وجہ سے صوبہ خیبر پختونخوا کے عوام جو کہ دہشت گردوں کے نشانہ پر ہیں میں بد دلی پیدا ہو سکتی ہے۔۔ انہوں نے کہا کہ امن و استحکام پاکستان میں اس وقت تک واپس نہیں آسکتا جب تک افغانستان میں امن واستحکام نہ ہو۔