سندھ کے دیہاتوں میں بجلی کے منصوبوں کیلئے3 ارب روپے کی منظوری

January 23, 2016 2:37 pm0 commentsViews: 18

کراچی(اسٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے صوبے کے دیہاتوں میں بجلی کے منصوبوں کے لئے 3ارب روپے کی منظوری دے دی ہے ،جس سے صوبہ سندھ کے دیہی علاقوں میں بجلی کی فراہمی کے منصوبے مکمل کئے جائیں گے۔ آج وزیراعلیٰ ہائوس میں اس سلسلے میں ایک اعلیٰ سطحی اجلاس کی صدارت کی۔ اس موقعہ پر وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ منصوبے پر ہر سال 1ارب روپے خرچ ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ یہ منصوبہ 3سال میں مکمل ہوگا۔سیدقائم علی شاہ نے کہا کہ کراچی کے 50دیہاتوں کو رواں سال بجلی فراہم کرنے کے لئے 60کروڑ روپے علیحدہ سے فراہم کئے گئے ہیں۔وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ سندھ انرجی ڈپارٹمنٹ 2000چھوٹے بڑے دیہاتوں کو بجلی پہنچائے گا۔

کیٹی بندر منصوبے کی بحالی کا فیصلہ کیا ہے، وزیراعلیٰ سندھ
بینظیر بھٹو بھی کوئلے سے چلنے والا 10 ہزار میگاواٹ کا پاور پلانٹ لگانا چاہتی تھیں
تھرکول سے کیٹی بندر تک کوئلے کی نقل و حمل کیلئے ریلوے لائن بچھانے کے لیے تیارہیں، وفدسے گفتگو
کراچی(اسٹاف رپورٹر) سندھ حکومت نے بالا آخر کیٹی بندر کے منصوبہ کو کوئلے سے چلنے والے 10,000میگاواٹ کے پاور پروجیکٹ کے ساتھ بحالی کا فیصلہ کرلیا ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے کہا کہ اس کا خواب میری لیڈرشہید محترمہ بینظیر بھٹو نے دیکھا تھا اور میری حکومت اس خواب کی حقیقی تعبیر کیلئے کوشاں ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ نے یہ بات چین کے ایک اعلیٰ سطحی وفد جس کی سربراہی نامور سفارتکار شازیوکانگ صدر چین، پاکستان ایسوسی ایشن کر رہے تھے، ان کے ساتھ چائنا انسٹیٹیوٹ برائے انٹرنیشنل اسٹریٹجک اسٹیڈیز اور سابق چین کے سفیر برائے پاکستان کے ساتھ وزیراعلیٰ ہائوس میں ملاقات کے موقعہ پر کہی۔وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ کیٹی بندر ایک قدرتی بندرگاہ ہے اور تھرکول فیلڈ کے قریب ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم تھر کول سے کیٹی بندر تک ریلوے لائن بچھانے کیلئے تیار ہیں تاکہ کوئلے سے چلنے والے پاور پلانٹ تک کوئلے کی نقل و حمل میں آسانی ہو سکے۔ انہوں نے کہا کہ کسی وقت میں کیٹی بندر سندھ کی تاریخی بندرگاہ تھی اور دنیا بھر میں مشہور تھی جس کے بارے میں عربی،یورپی اور وسطی ایشیاء کے رائٹرزنے بھی لکھا ہے۔انہوں نے کہا کہ شہید بینظیر بھٹو کیٹی بندرگاہ کی بحالی کی خواہاں تھیں اور وہاں پر کوئلے سے چلنے والا 10,000میگاواٹ کا پاور پلانٹ لگانا چاہتی تھیں، مگر یہ ان کی زندگی میں ممکن نہ ہو سکا۔مگر اب میری حکومت نے اس منصوبہ کی بحالی کا فیصلہ کیا ہے۔