انسداد دہشتگردی کی 10عدالتیں فوری قائم کرنیکی تیاریاں

January 25, 2016 3:10 pm0 commentsViews: 18

محکمہ داخلہ سندھ نے نئی اے ٹی سی کے قیام کے ساتھ13کروڑ روپے جاری کرنے کی سمری بھی ارسال کردی
چینی باشندوں کی سیکورٹی کیلئے، 2ہزار ریٹائرڈ فوجیوں کی بھرتی کا حکم، ہر عدالت پر سالانہ ایک کروڑ30لاکھ درکارہونگے
کراچی( نیوز ڈیسک) محکمہ داخلہ سندھ نے10 نئی اے ٹی سی کے قیام کے ساتھ ان کیلئے13 کروڑ روپے جاری کرنے کی سمری ارسال کردی ہے‘ اسکے علاوہ مختلف منصوبوں پر کام کرنیوالے چینی باشندوں کی سیکورٹی کیلئے2ہزار ریٹائرڈ فوجیوں کو فوری طور پر بھرتی کرنے کے احکامات جاری کئے گئے ہیں‘ باخبر ذرائع کے مطابق قومی ایکشن پلان کے تحت جاری آپریشن کے باعث انسداد دہشت گردی کی عدالت میں زیر سماعت مقدمات کی تعداد بڑھ جانے اور مقدمات تیزی سے نمٹنے کیلئے ایپکس کمیٹی سندھ نے مرحلہ وار 30 نئی عدالتیں قائم کرنے کا فیصلہ کیا تھا‘ ایڈیشنل چیف سیکریٹری داخلہ نے پہلے مرحلے میں10 نئی اے ٹی سیز کے قیام کی منظوری کیلئے سمری تیار کرکے وزیراعلیٰ سندھ کو ارسال کردی ہے‘ ساتھ ہی محکمہ خزانہ کو بھی ایک لیٹر ارسال کیا گیا ہے جس میں ہر عدالت کے سالانہ اخراجات کی مد میں ایک کروڑ30لاکھ روپے مختص کرکے13کروڑ روپے جاری کرنے کو کہا گیا ہے‘ عدالتوں کے قیام کی منظوری کے بعد ان عدالتوں کیلئے ججز کو مقرر کرنے کیلئے چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ کو درخواست کی جائیگی‘ ذرائع نے بتایا کہ مذکورہ عدالتوں کیلئے10ججوں کی بھرتی کیساتھ اسسٹنٹ ‘اسٹینو گرافرز‘ کلرکس‘نائب قاصد وغیرہ سمیت تقریباً 90 بھرتیاں کی جائیں گی۔