سینیٹ کی قائمہ کمیٹی کا اجلاس، نیب کے اختیارات محدودکرنے کا پیپلز پارٹی کا بل منظور

January 28, 2016 12:35 pm0 commentsViews: 22

وزارت قانون اور نیب کا شدیدا حتجاج، کمیٹی کے 5ارکان نے تاج حیدر کے بل کی حمایت اور4نے مخالفت کی
بل کی منظوری سے خلا پیدا ہوجائے گا، صوبوں میں احتساب کا قانون بننے تک بل کی منظوری نہ دی جائے، وزارت قانون
اسلام آباد( مانیٹرنگ ڈیسک) نیب کو مرکز تک محدود کرنے کی جانب پیش رفت کا آغاز ہوگیا ہے۔ سینیٹ کی قائمہ کمیٹی نے نیب کا صوبوں میں کارروائی کا اختیار محدود کرنے کیلئے پیپلز پارٹی کے بل کی منظوری دیدی۔ وزارت قانون کی مخالفت کسی کام نہ آئی۔ پیپلز پارٹی کی نیب کے پر کاٹنے کی کوشش جاری ہیں۔ سینیٹ قائمہ کمیٹی کے صوبوں میں کارروائی کے اختیار کا بل منظور کرلیا گیا ہے۔ وزارت قانون او رنیب کی جانب سے بل کی شدید مخالفت کی گئی ہے سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے قانون میں پیپلز پارٹی کے سینیٹر تاج حیدر کے بل پر بحث کے دوران وزارت قانون حکام نے موقف اختیار کیا کہ بل منظوری سے خلا پیدا ہوجائے گا صوبوں میں احتساب کا قانون بننے تک اسے منظور نہ کیا جائے۔ ڈی جی نیب کا کہنا تھا کہ اگر کرپشن جرم نہیں تو نیب کا موجودہ قانون بے شک ختم کر دیا جائے۔ بل پر قائمہ کمیٹی کے ارکان اورمتعلقہ اداروں کا نکتہ نظر سننے کے بعد ووٹنگ کرائی گئی۔ 5 ارکان نے تاج حیدر کے بل کی حمایت، 4 نے مخالفت کی۔ قائمہ کمیٹی سے منظوری کے بعد اب بل ایوان بالا میں پیش کیا جائے گا۔