ژوب چھائونی پر حملہ ناکام ، خودکش حملہ آور ہلاک، چمن میں کلینک پر فائرنگ، 2ہلاک

January 30, 2016 3:14 pm0 commentsViews: 76

حملہ آور چھائونی میں داخل ہونا چاہتے تھے، سیکورٹی فورسز نے روکا تو خود کو دھماکے سے اڑا دیا، 4جوان اور 2بچے زخمی ہوگئے
دھماکے سے عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے، وزیراعلیٰ کی واقعہ پر شدید مذمت، ساکران کا رخمی اہلکار دم توڑ گیا، کوئٹہ ،سبی اور ڈیرہ بگٹی میں کارروائیاں ، ایک دہشتگرد مارا گیا
کوئٹہ( یو پی پی) ژوب چھائونی میں خود کش دھماکے میں4 اہلکار اور2 بچے زخمی ہوئے، حملہ آور چھائونی میں اندر داخل ہونا چاہتے تھے۔ فورسز نے گیٹ پر روکا تو اس نے خود کو گاڑی سمیت اڑا دیا۔ دھماکے سے قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے، زخمیوں میں حوالدار کامران، حوالدار ساجد ، لارنس نائیک ساجد، سپاہی علی احمد، 2 بچے نبی بخش اور فدا الرحمن شامل ہیں۔ ڈی پی او ژوب زاہد افضل کے مطابق دھماکا خود کش تھا جس کی ذمہ داری ٹی ٹی پی کمانڈر خان سعید گروپ کے اعظم طارق نے ڈی آئی خان میں ایک ریڈیو رپورٹر کو فون کرکے قبول کی ہے۔ وزیر اعلیٰ بلوچستان نے خود کش دھماکے کی مذمت اور اہلکاروں کے زخمی ہونے پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔ ادھر ساکران کے علاقے میں گزشتہ دنوں پولیس موبائل پر فائرنگ سے زخمی ہونے والا اے ایس آئی امداد حسین رونجھو کراچی کے اسپتال میں شہید ہوگیا۔ چمن میں جمعیت کو قندھاری روڈ پر نا معلوم موٹر سائیکل سواروں نے ایک کلینک پر فائرنگ کر دی جس سے2 افراد حیات اللہ اور نصر اللہ جاں بحق اور2 زخمی ہوگئے۔ کوئٹہ ، سبی او ڈیرہ بگٹی میں کالعدم تنظیموں کے خلاف کارروائی ایک دہشت گرد ہلاک ہوگیا۔