سعودی عرب، خواتین کا دہشت گردی میں استعمال روکنے کا فیصلہ

February 2, 2016 3:16 pm0 commentsViews: 24

ہوائی اڈوں، سفری راہداریوں سے گزرنے والوں کی تلاشی اور فنگر پرنٹس چیک کرنے کی ہدایت
دہشت گرد تنظیمیں فنڈز ریزنگ، بارودی مواد منتقل کرنے کیلئے صنف نازک کو استعمال کر رہی ہیں
ریاض ( یو پی پی) شام اور عراق سمیت دوسرے ممالک میں دہشت گردی کی وحشیانہ کارروائیوں میں ملوث دہشت گرد تنظیم داعش اپنے مذموم مقاصد کے حصول کیلئے صنف نازک کو ایک جنگی ہتھیار کے طور پر استعمال کر رہی ہے۔ سعودی عرب کی وزارت داخلہ نے دہشت گردی کے مذموم مقاصد کیلئے خواتین کے استعمال کی روک تھام کیلئے چیکنگ کا نظام مزید سخت کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ ہوائی اڈوں پر سفری راہداریوں پر مرد وزن کی شناخت کیلئے ان کے فنگر پرنٹس لئے جائیں گے، عرب ٹی وی کے مطابق پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سعودی وزارت داخلہ کے ترجمان میجر جنرل منصور الترکی نے کہا کہ دہشت گرد تنظیمیں فنڈ ریزنگ، بارودی مواد منتقل کرنے کیلئے خواتین کو استعمال کر تی ہیں۔ تمام سیکورٹی اداروں کو ہوائی اڈوں اور سفری راہداریوں سے گزرنے والے مردوں اور خواتین کی تلاشی لینے اور ان کے فنگر پرنٹس چیک کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔