ٹھٹھہ میں سانپوں کی اسمگلنگ عروج پر، محکمہ جنگلی حیات خاموش ۔ ٹھٹھہ کی مزید خبریں

February 3, 2016 2:33 pm0 commentsViews: 85

شکاری ہر مہینے ایک ہزار سے لے کر 1500 سانپ ملک اور بیرون ملک فروخت کررہے ہیں
سرد موسم میں اسمگلنگ میں تیزی آجاتی ہے، 7کلو وزنی سانپ کی قیمت50لاکھ روپے ہے
ٹھٹھہ ( آئی این پی ) ٹھٹھہ میں سانپوں کی اسمگلنگ کا دھندہ عروج پر پہنچ گیا۔ سانپوں کے شکاری روزانہ بڑی تعداد میں سانپ پکڑ کر ملک اور بیرون ملک اسمگل کرنے میں مصروف ہیں جبکہ محکمہ جنگلی حیات خاموش ہے۔ تفصیلات کے مطابق مکلی ملک بھر میں دو حوالوں سے معروف ہے۔ پہلا تاریخی قبرستان اور دوسرا سانپوں کے حوالے سے جانا جاتا ہے مکلی اور ٹھٹھہ کی پہاڑی اور ساحلی پٹی میں بڑی تعداد میں نایاب اقسام کے سانپ پائے جاتے ہیں۔ جن میں کوبرا، واسینگ، کورا، وائپر، رسیلی، کھپرا، لنڈی، سنگچور او ردیگر اقسا شامل ہیں۔ مکلی کے جوگی شکاری ہر مہینے ایک ہزار سے لیکر پندرہ سو سانپ پکڑ کر ملک اور بیرون ملک اسمگل کر رہے ہیں۔ سانپ سے نکالا گیا زہر زیادہ تر سانپ کے کاٹے کے علاج یا تریاق کے طور پر استعمال کیا جاتا ہے۔ واضح رہے کہ سانپ کا زہر چند کاسمیٹکس میں بھی استعمال ہوتا ہے۔ سات کلو وزن کے سانپ کی قیمت پچاس لاکھ روپے تک ہوتی ہے۔ سرد مودسم میں ان کی اسمگلنگ میں تیزی آجاتی ہے۔

چھوٹے نے بڑے بھائی کے 22لاکھ روپے ہڑپ کرلیے
فیض اللہ خان کا اہلیہ اور بچوں سمیت نیوی گیٹر اسکول کے سامنے احتجاج
فتح اللہ کو اسکول کھولنے کیلئے دیے تھے،ا علیٰ حکام سے رقم واپس دلانے کا مطالبہ
ٹھٹھ ( نمائندہ آغاز) ٹھٹھ دولت کے نشے نے چھوٹے بھائی کو اندھا کردیا بڑے بھائی کو ملازمت سے برطرف کرکے اسکی رقم ہڑپ کر دی بڑے بھائی کا چھوٹے بھائی کے خلاف اسکول کے سامنے اہلیہ بچوں سمیت احتجاج ، مکلی کا رہائشی نوجوان فیض اللہ خان نے اپنے اہلیہ اور بچوں سمیت مکلی میں واقع نجی اسکول نیوی گیٹراسکول و کالج کے ایڈمنسٹریٹر اور ر ان کے چھوٹے بھائی فتح اللہ خان کے خلاف اسکول کے گیٹ کے سامنے احتجاج کیا بڑے بھائی فیض اللہ خان کا کہنا تھا کہ فتح اللہ خان میرا چھوٹا بھائی ہے اور اسکول کھولنے کیلئے میںنے اس کو 22لاکھ روپے رقم ادھار بھی دی اور اب لالچ میں آکر دولت کے نشے میں اندھا ہوگیااور مجھے اسکول سے نکال دیا اور میرے جگہ نوید سومرو نامی ٹیچرکو ملازمت پر رکھ دیا اور مجھے میری رقم بھی واپس نہیں کر رہا انہوں نے کہا کہ میرا چھوٹا بھائی فراڈ ی ہے انہوں نے ڈپٹی کمشنر اور ایس ایس پی ٹھٹھ سمیت اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔

سول اسپتال ٹھٹھہ این جی اوز کے حوالے کرنے کیخلاف احتجاج جاری
پیرامیڈیکل اسٹاف کی 45ویں روز بھی 2گھنٹے تک ٹوکن ہڑتال،تمام شعبہ جات بند رہے
سندھ حکومت نے ساڑھے14کروڑ روپے بجٹ سمیت مرلن فائونڈیشن کے حوالے کردیا ہے
ٹھٹھ( نمائندہ آغاز) سول ہسپتال ٹھٹھ کو این جی اوز کے حوالے کرنے کے خلاف درجنوں پیرا میڈیکل اسٹاف کا 45ویں روز بھی احتجاج کا سلسلہ جاری رکھا احتجاج کی قیادت حاجی ابراھیم سمیجو ،ممتاز سرکی ،لیاقت عباسی ،منظور چانڈیو ،علی خاصخیلی اور دیگر نے کی ملازمین نے دو گھنٹے صبح نو بجے سے گیارہ بجے دو گھنٹے تک ٹوکن ہڑتال کی اور تمام شعبوں کی تالا بندی کی جس کی وجہ سے علاج کیلئے آنے والے مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا دوسری جان سندھ حکومت کی جانب سے سول ہسپتال ٹھٹھ کو ساڑھے چودہ کروڑ روپے بجٹ سمیت مرلن فاونڈیشن کے حوالے کیا گیا جبکہ مرلن ا ین جی اوز نے تاحال ہسپتال کا انتظام نہیں سنبھالا ہے اور ہسپتال میں بجٹ کی عدم دستیابی کے باعث ہسپتال میں جان بچانے والی ادویات ،کتے اور سانپ کے کاٹنے کے انجکشن سمیت سرنج ،فالج ،ان سولن سمیت دیگر ادویات نایاب ہوگئی اور ہسپتال کا نظام درہم برہم ہوگیا ہے جبکہ ہسپتال میں ڈیپوٹیشن پر کام کرنے والے 78پیرا میڈیکل اسٹاف سمیت 27ڈاکٹروں کو سول سرجن نے سپریم کورٹ کی ہدایت پر ان کے ڈیپوٹیشن منسوخ کردی ہے جس کی وجہ سے ڈاکٹروں کی بھی قلت ہوگئی اور اب صرف چودہ ڈاکٹر رہ گئے ہیں ۔

سول جج ٹھٹھہ کے
رورل ہیلتھ سینٹر جنگ شاہی پر چھاپہ ‘
ملازمین کی حاضری چیک کی
ٹھٹھ ( نمائندہ آغاز) سول جج ٹھٹھ غلام مرتضی نے روول ہیلتھ سینٹر جنگ شاہی پر اچانک چھاپہ مار اور ملازمین کو لائن میں کھڑا کرکے ان کی حاضری سمیت شناختی کارڈ بھی چیک کئے اور ہسپتال میں ادویات سمیت صفائی ستھرائی کا بھی جائزہ بھی لیا ۔

جئے سندھ محاذ کے رہنما سید نواز شاہ کے
گھر چھاپہ کوئی گرفتاری عمل میں نہ آسکی
ٹھٹھ ( نمائندہ آغاز) ٹھٹھ پولیس نے گھوڑا باری میں جئے سندھ محاذ کے مرکزی وائس چیئرمینسید نواز شاہ باڈائی کے رہائش گاہ پر گرفتاری کیلئے چھاپہ مار تاہم کوئی گرفتاری عمل میں نہ آسکی دوسری جانب جسقم کے رہنما وقار میمن نے نواز شاہ باڈائی کے گھر پرپولیس چھاپے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ان کارروائیوں سے محاذ کے کارکنوں کو حق سچ کی راہ سے ہٹایا نہیں جاسکتا ۔

واپڈا کی نجکاری کیخلاف بھی احتجاج
قومی شاہراہ پر دھرنا‘ ٹریفک معطل
ٹھٹھ ( نمائندہ آغاز)واپڈا کی نجکاری کے خلاف د رجنوں ملازمین کا ٹھٹھ کراچی قومی شاہراہ پر دھرنادیکر ٹریفک معطل کردی واپڈا ہائیڈرو یونین کی جانب سے واپڈا کی نجکاری کے خلاف درجنوں ملازمین نے شوکت وسطڑو اشتیاق‘احمد شیخ ،شیرزمان سہتو،بشیر احمد چوہان کی قیادت میںدفتر وں کی تالا بندی کرکے احتجاجی مظاہرہ کیا اور ٹھٹھ کراچی قومی شاہراہ پر دھرنا دیا اور واپڈا کو نجکاری کرنے پروزیراعظم نوازشریف اور شہباز شریف کے خلاف سخت نعرے بازی کی اس موقع پر ملازمین نے کہا کہ واپڈا کی نجکاری کسی صورت ہونے نہیں دینگے

ٹھٹھہ‘ نیشنل بینک مکلی کیخلاف
شہریوں کا قومی شاہراہ پر احتجاج
ٹھٹھ ( نمائندہ آغاز)ٹھٹھ ،نیشنل بینک مکلی انتظامہ کے خلاف درجنوں شہریوں کا ٹھٹھ کراچی قومی شاہراہ پر احتجاج مظاہرہ کیا نیشنل بینک انتظامیہ کی جانب سے تنخواہوں کیلئے آنے والے درجنوں افراد کو تنخواہیں ادا نہ کرنے اوربینک کے گیٹ بند کرنے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا اور ٹھٹھ قومی شاہراہ پر دھرنا دیا بعدازاں پولیس نے پہنچ کر صورتحال کو کنٹرول کیا احتجاج کرنے والے افراد کا کہنا تھا بینک انتظامیہ ہر ماہ کی پہلی تاریخ کو تنخواہوں کے وقت مختلف بہانے بناکر ہمیں پریشان کیا جاتا ہے انہوں نے اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا۔