ملیر کے راشدی گوٹھ کے1300 گھر مسمار، مکینوں کا احتجاج

February 8, 2016 1:15 pm0 commentsViews: 37

ہزاروں افراد کو بے گھر کیا گیا، مساجد اور مندر بھی مسمار کیے گئے، پریس کلب کے باہراحتجاجی مظاہرین کی بات چیت
کراچی (اسٹاف رپورٹر) ملیر کے راشدی گوٹھ کے مکینوں نے اپنے گھر مسمار کرنے کے خلاف کو اتوار کو کراچی پریس کلب کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا ۔مظاہرے کی قیادت علی لغاری،پورن سائیں و دیگر کر رہے تھے ۔مظاہرین نے ہاتھوں میں بینرز اور پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے ۔مظاہرین کا کہنا تھا با اثر بلڈر اور ڈی سی ملیر نے راشدی گوٹھ اور پاکستان ہومز میں 1300سے زائد گھروں کو مسمار کردیا جس کے باعث ہزاروں افراد بے گھر ہوگئے ہیں ۔مظاہرین نے بتایا کہ راشدی گوٹھ 37ایکڑ اور پاکستان ہومز کی زمین13ایکٹر پر محیط ہے اور ہم یہاں کئی دہائیوں سے مقیم ہیں، کارروائیمیں مساجد و مندر کو بھی مسمار کیا گیا جس سے ہمارے جذبات مجروح ہوئے ہیں ، مظاہرین نے چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ ،وزیر اعلیٰ سندھ اورگورنر سندھ سے اپیل کی ہے کہ ہمارے مالکانہ حقوق کا تحفظ کیا جائے اور ہمیں انصاف فراہم کیا جائے ۔