جیکب آباد کے راستے، غیر ملکی اشیاء کی اسمگلنگ عروج پر، عملہ خاموش تماشائی بن گیا

February 9, 2016 1:09 pm0 commentsViews: 58

سندھ اور پنجاب میں غیر ملکی ڈیزل، موبل آئل، گاڑیوں کے اسپیئرپارٹس، چھالیہ، گٹکا، ایرانی گرم کمبل اور دیگر اشیاء باآسانی اسمگل ہورہی ہیں
کسٹم عملہ نے رشوت کے عوض اسمگلر مافیا کو دن رات دھندا جاری رکھنے کی کھلی چھوٹ دے رکھی ہے
جیکب آباد(یو پی پی) جیکب آباد کے راستے سندھ اور پنجاب میںغیر ملکی ڈیزل، موبل آئل، گاڑیوں کے پارٹس، چھالیہ ،گٹکا اور ایرانی گرم کمبل ودیگر اشیاء کی سرعام اسمگلنگ کا سلسلہ جاری،سندھ بلوچستان کی سنگم پر قائم کردہ چیک پوسٹوں کا عملہ خاموش تماشائی‘ قومی معیشت کو بھاری نقصان ۔تفصیلات کے مطابق جیکب آباد کے راستے غیرملکی سامان کی اسمگلنگ کا کاروبار عروج پر ہے، جیکب آباد کے راستے سندھ اور پنجاب کے مختلف اضلاع میں غیر ملکی سامان باآسانی پہنچایا جاتا ہے جس کی وجہ سے ملکی معیشت کو اربوں کا نقصان ہورہا ہے مگر کسٹم حکام بھاری رشوت کے عوض خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں اور جیکب آباد کو اسمگلنگ کا بڑا مرکز قرار دیا جاتا ہے۔ غیر ملکی چیزوں کی اسمگلنگ کی روک تھام کیلئے محکمہ اینٹی اسمگلنگ اسکواڈکی جانب سے چیک پوسٹیں تو قائم ہیں مگر ان چیک پوسٹوں پر تعینات عملے کی چشم پوشی کے باعث اسمگلر مافیا دن ہو یا رات اپنے دھندے کو جاری رکھے ہوئے ہیں۔